مٹی کا کھیل ناول از رزاق شاہد کوہلر 108

مٹی کا کھیل ناول از رزاق شاہد کوہلر

مٹی کا کھیل رزاق شاہد کوہلر کا دلچسپ ناول

زیرِ نظر ناول “مٹی کا کھیل” موت سے آنکھ مچولی کھیلنے والے ایک جیالے نوجون کی دستان ہے۔ یہ ناول سب سے پہلے عرصہ اڑھائی برس تک ماہنامہ “حکایات” جیسے موقر جریدے میں قسط وار شائع ہوتا رہا ہے۔ یہ بات کسی اعزار سے کم نہیں ہے کہ دورانِ اشاعت یہ ناول ماہنامہ “حکایات” کا مقبول ترین سلسلہ رہا ہے اور قارئین کی ایک بڑی تعداد نئی قسط کی منتظر رہا کرتی تھی۔
ابھی اس ناول کی ابتدائی چند قسطیں ہی شائع ہوئی تھی کہ اس دوران قارئین اسرار کرنے لگے کہ وہ اس ناول کو کتابی صورت میں پڑھنے کے لئے بےتاب ہیں ۔ مگریہ اُس وقت ناممکن تھا۔ اختتامیہ قسط کی اشاعت کے بعد ہی اسے کتابی صورت میں شائع کیا جاسکتا تھا۔ لہٰذہ ماہنمامہ “حکایات” میں آخری قسط شائع ہونے کے بعد اسے کتابی صورت میں شائع کیا گیا۔
مٹی کا کھیل (مٹی کی کہانی) مصنف اور ناول نگار رزاق شاہد کوہلر کا ایک نہایت دلچسپ سماجی و ثقافتی اور رومانوی ناول ہے جو ہمارے معاشرے میں ہونے والی ناانصافی اور طاقتور کے ظلم پر لکھا گیا ہے۔ یہ انسان اور اس کی اپنی دھرتی کے ساتھ محبت کی کہانی ہے۔
انسان جو مٹی سے پیدا ہوا ہے اس کا اپنی زمین سے بہت مضبوط رشتہ ہے۔ وہ اپنی زمین، اپنی جائیداد کو بڑھانے کے لیے ہر خوفناک اور خطرناک کام کرتا ہے۔ وہ اپنی سرزمین کو حملہ آوروں اور زمین پر قبضہ کرنے والوں سے بچانے کے لیے قربانیاں بھی دیتے ہیں۔ وہ اپنی چھوٹی سی زندگی میں اس سرزمین کے لیے مرتا ہے، اور دوسروں کی جانیں بھی لے لیتا ہے یہاں تک کہ قریبی رشتہ داروں اور خون کے رشتوں کی بھی۔
لالچ اور خودغرضی میں، ایک آدمی خالص برائی بن جاتا ہے لیکن بالآخر مر جاتا ہے اور زمین کے ایک چھوٹے سے ٹکڑے میں غائب ہو جاتا ہے، اس کی قبر۔ ہم امید کرتے ہیں کہ ہمارے سماجی رومانوی ناولز کے قارئین اس ناول کو دلچسپ محسوس کریں گے اور اپنے تبصرے اور تاثرات دیں گے۔

یہاں سے ڈاؤنلوڈ کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں