شاہانِ بے تاج از پرفیسر وحیدہ نسیم 50

شاہانِ بے تاج از پرفیسر وحیدہ نسیم

شاہانِ بے تاج از پرفیسر وحیدہ نسیم

شاہان بے تاج، پروفیسر وحیدہ نسیم کی تحریر کردہ، اورنگ آباد، ہندوستان کے چند نامور بزرگوں کی ایک منفرد اور بصیرت انگیز سوانح عمری ہے۔ یہ کتاب مصنف کے 1990 کی دہائی میں ہندوستان کے اپنے سفر پر مبنی ہے، جہاں وہ ان کے مزارات پر گئی اور ان کی زندگیوں اور تعلیمات کے بارے میں جان گئی۔

پروفیسر نسیم ایک نامور ماہر تعلیم، ناول نگار اور مختصر افسانہ نگار تھیں. تصوف اور اولیائے کرام سے ان کی محبت اس کتاب کے ہر صفحے پر عیاں ہے۔ وہ گرمجوشی اور شفقت کے ساتھ لکھتی ہیں، ان قابل ذکر افراد کی کہانیوں اور ہندوستان میں مسلم کمیونٹی پر ان کے اثرات کو اُجاگر کرتی ہیں۔

کتاب کا آغاز ہندوستان میں تصوف کی تاریخ کے ایک مختصر جائزہ سے ہوتا ہے، اور اس کے بعد اورنگ آباد میں رہنے والے اور کام کرنے والے 25 اولیاء کی کہانیاں بیان کرتے ہیں۔ یہ اولیاء زندگی کے تمام شعبوں سے آئے تھے، لیکن یہ سب خدا کے لیے گہری محبت اور انسانیت کی خدمت کے جذبے‌سے‌سرشار تھے۔

پروفیسر نسیم ہر ایک ولی کی زندگی اور تعلیمات کے بارے میں تفصیل سے لکھتی ہیں، اور وہ ان کی اہمیت پر اپنے ذاتی تاثرات بھی بتاتی ہیں۔ وہ ان مزارات کے بارے میں بتاتی ہیں جن کا اس نے دورہ کیا تھا، اور وہ ان لوگوں کے بارے میں بات کرتی ہیں جن سے وہ ملی تھی جو ان‌اولیاء کرام کے تعلیمات سے متاثر تھے۔

یہ کتاب ان لوگوں کے لیے بھی ایک قیمتی ذریعہ ہے جو ہندوستان میں مسلمانوں کے حالات کے بارے میں مزید جاننا چاہتے ہیں۔ پروفیسر نسیم ہندوستان میں مسلمانوں کو درپیش چیلنجوں پر بات کرتی ہیں، لیکن وہ ان کی لچک اور اپنی ثقافت اور عقیدے کو محفوظ رکھنے کے عزم کو بھی اجاگر کرتی ہیں۔

شاہان بے تاج ایک خوبصورت تحریر اور فکر انگیز کتاب ہے جو قارئین کی ایک وسیع رینج کو پسند آئی گی۔ تصوف، اسلام یا ہندوستانی تاریخ میں دلچسپی رکھنے والے ہر فرد کو یہ کتاب ضرور پڑھنا چاہیے۔ کتاب پاکستان ورچوئل لائبریری کے قارئین کے مطالعہ کے لئے آنلائن پیش کی جارہی ہے. ڈاؤنلوڈ کرنے کے لئے ذیل میں موجود لنک سے استفادہ کریں.

یہاں‌سے ڈاؤنلوڈ کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں